جمعہ کو 24نیوز ایچ ڈی ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب محسن نقوی نے جمعرات کی رات گئے ان ہسپتالوں کے 3 گھنٹے کے دورے کے دوران پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی (PIC)، چلڈرن ہسپتال اور جنرل ہسپتال، لاہور کی اپ گریڈیشن کے کام کا جائزہ لیا۔

وزیراعلیٰ نے متعلقہ حکام کو چلڈرن ہسپتال کے مین کوریڈور کے فرش پر نئی ٹائلیں لگانے کی ہدایت کی۔

اس موقع پر انہوں نے انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ اتھارٹی پنجاب سے بھی کہا کہ وہ انہیں 24 گھنٹے کے اندر نئے کاؤنٹرز کا ڈیزائن پیش کریں۔ نقوی نے جنرل ہسپتال کی اپ گریڈیشن میں سست رفتاری کا نوٹس لیا۔ نئی ٹائلیں لگانے اور نئے کاؤنٹر بنانے کا کام 10 دن میں مکمل کیا جائے، محسن نقوی نے زور دیا۔

دورے کے دوران نقوی چلڈرن ہسپتال میں زیر علاج 12 سالہ بچے محمد احمد کے بستر پر آئے بچے سے مصافحہ کیا اس سے پیار کیا اور اس کا حال دریافت کیا۔

وہ آپ (سی ایم) کا بہت بڑا پرستار ہے بچے کی ماں نے سی ایم کے ساتھ اپنی گفتگو میں کہا۔ محسن نقوی نے بچے کے علاج کے بارے میں دریافت کیا اور ڈاکٹروں کو علاج کی بہترین سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت کی۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ نے زیر علاج دیگر بچوں کی خیریت بھی دریافت کی۔

محسن نقوی نے مختلف منزلوں پر کام کرنے والے کارکنوں سے مصافحہ بھی کیا اور پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں جاری تعمیراتی سرگرمیوں کا معائنہ کیا۔

ہسپتالوں میں سے ایک کے دورے کے دوران انہوں نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ مریضوں کے لواحقین کے بیٹھنے کا مناسب انتظام کیا جائے۔ انہوں نے پی آئی سی میں جاری تعمیراتی سرگرمیوں کا بھی جائزہ لیا۔ پراجیکٹ پر کام کی رفتار کا نوٹس لیتے ہوئے محسن نقوی نے جنرل ہسپتال کی چار منزلوں پر جاری اپ گریڈیشن کے کام کا بھی مشاہدہ کیا۔ انہوں نے منصوبے پر کام کی سست رفتاری کا نوٹس لیتے ہوئے دوسری تیسری اور چوتھی منزل پر کام کی رفتار کو تیز کرنے کی ہدایت کی۔ نقوی نے اسپتال کو انفیکشن سے پاک بنانے کے لیے تمام ضروری اقدامات کرنے کی بھی ہدایت کی۔

اس موقع پر سیکرٹری تعمیرات و مواصلات اور سیکرٹری صحت نے وزیراعلیٰ کو ہسپتالوں میں اپ گریڈیشن کے کام کے حوالے سے بریفنگ دی۔